Home / شوبز / دارا لسکون آکر بہت سکون ملا ہے‘فلم اسٹار میرا

دارا لسکون آکر بہت سکون ملا ہے‘فلم اسٹار میرا

اسپیشل بچوں کی نگہداشت کیلئے ہم سب کو مل جل کر کام کرنا ہوگا
اسپتال بنانے کیلئے سرکاری زمین دی جائے، اداکارہ کی میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو
کراچی (کلچرل رپورٹر) پاکستان کی معروف فلم اسٹار میرا نے کہا ہے کہ خصوصی بچوں کی نگہداشت کے لئے ہم سب کو مل جل کر کوششیں کرنا ہوں گی، دارالسکون میں آکر بہت سکون ملا ہے، اصل زندگی یہ ہی ہے کہ ہم ان اسپیشل بچوں کی بحالی کیلئے کام کریں تاکہ ہماری دنیا اور آخرت دونوں بہتر ہوجائیں، ذہنی معذور بچوں کے ادارے دارالسکون کے دورے کے موقع پر میرا بچوں میں گھل مل گئیں، اس دورے کا اہتمام پاکستان فلم اینڈ ٹی وی جرنلسٹس ایسوسی ایشن نے کہا تھا میرا نے کہا ہے کہ اپنی بقایا زندگی فلاحی کاموں کے لئے وقف کرتی ہوں مجھے اسپتال بنانے کے لئے سرکاری طور پر زمین الاٹ کی جائے، پرائویٹ سطح پر زمین لینا نہیں چاہتی۔ جب مجھے پرائڈ آف پرفارمنس مل سکتا ہے تو پھر اسپتال بنانے پر زمین کیوں نہیں مل سکتی، واحد فنکارہ ہوں جس نے کم عمر میں ہی پرائڈ آف پرفارمنس حاصل کیا۔ اسپیشل بچوں کی دل جوئی کیلئے دارالسکون آتی رہتی ہوں۔ یہ ایک عظم ادارہ ہے جو اسپیشل بچوں کی خدمت کررہا ہے، بحثیت قوم ہم سب کو ان بچوں کے لئے کام کرنا چاہئے اصل زندگی کا مقصد ہی لوگوں کے کام آنا ہوتا ہے۔ اس موقع پر پاکستان فلم اینڈ ٹی وی جرنلسٹس ایسوسی ایشن کے چیئرمین اطہر جاوید اور صدر عبدالوسیع قریشی بھی موجود تھے، بعد ازاں میرا نے کچھ وقت اسپیشل بچوں کے ساتھ گزارا پھر وہ کراچی پریس کلب پہنچ گئیں اور وہاں غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ ہمیں سڑکوں پر بھیک مانگنے والے بچوں کے لئے بھی کام کرنا ہوگا اور ان بچوں کو ایک خوشحال زندگی دینا ہوگی۔

About محمد ہارون عباس قمر

محمد ہارون عباس، صحافی، براڈکاسٹراورسافٹ وئر انجینئرپاکستان کے مانچسٹر فیصل آباد میں پیدا ہوئے۔ابتدائی تعلیم فیصل آباداوربراڈکاسٹنگ کی تعلیم ہلورسم اکیڈمی ، ہالینڈسے حاصل کی۔ کمپیوٹر میں تعلیم اسلام آباد، پاکستان سے حاصل کرنے کے ساتھ ساتھ، ریڈیائی صحافت سے وابستہ رہے ہیں۔اس حوالے سے پاکستان کے مختلف ٹی وی چینلزکے ساتھ ساتھ ریڈیو ایران،ریڈیو پاکستان سے ان کی وابستگی رہی۔ تعلیم اور صحافتی سرگرمیوں کے سلسلے میں وہ پاکستان کے مختلف شہروں کے علاوہ ایران، سری لنکا، نیپال، وسطی ایشیائی ریاستوں‌کے علاوہ مشرقی یوروپ کے مختلف ممالک کا سفر کر چکے ہیں۔مختلف اخبارات میں سماجی، سیاسی اور تکنیکی امور پر ان کے مضامین شائع ہوتے رہتے ہیں۔علاوہ ازیں اردو زبان کو کمپیوٹزاڈ شکل میں ڈھالنے میں ان کا بہت بڑا کردار ہے۔ محمد ہارون عباس ممتاز این جی اوز سے وابستہ رہے ہیں۔ جن میں جنوبی ایشیائی ممالک کی تنظیم ساوتھ ایشین سنٹر اور پاکستان کی غیر سرکاری تنظیموں کے نمائندہ فورم پاکستان این جی اوز فیڈرشین شامل ہیں۔ علاوہ ازیں پاکستان مسلم لیگ کے مرکزی میڈیا ونگ اسلام آباداور پاکستان کے پارلیمنٹرینز کی تنظیم پارلیمنٹرین کمشن فار ہیومین رائٹس میں بھی تکنیکی امور کے نگران رہے ۔وہ پاکستان کے سب سے بڑے نیوز گروپ جنگ گروپ آف نیوزپیپرز، پاکستان کے اردو زبان کے فروغ کے لئے قائم کئے گئے ادارے مقتدرہ قومی زبان ، پاکستان کے سب سے بڑے صنعتی گروپ دیوان گروپ آف کمپنیز کو تکنیکی خدمات فراہم کرتے رہے ہیں۔ محمد ہارون عباس القمر آن لائن کے انتظامی اور تکنیکی امور کے نگران ہیں۔ اس کے ساتھ ساتھ انہیں انٹرنیٹ پر پاکستان کی تمام نیوز سائٹس کے پلیٹ فارم پاکستان سائبر نیوز ایسوسی ایشن کے پہلے صدر ہونے کا بھی اعزاز حاصل ہے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے