Home / اہم ترین / جو ووٹ کو عزت نہیں دے گا؟ نواز شریف نے سب کو ہلا کر رکھ دیا

جو ووٹ کو عزت نہیں دے گا؟ نواز شریف نے سب کو ہلا کر رکھ دیا

کوٹ مومن: سابق وزیراعظم نواز شریف کا کہنا ہے کہ جو ووٹ کو عزت نہ دے ہم اس کی عزت نہیں کریں گے۔کوٹ مومن میں تعزیتی ریفرنس سے خطاب کرتے ہوئے نوازشریف نے کہا کہ پاکستان کے بڑے بڑے وکیلوں نے کہا ہے کہ نواز شریف کو ایک اقامے کی بنیاد پر نکالنے کا فیصلہ درست نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ نواز شریف کو وزارت عظمیٰ کے عہدے سے نکال رہے ہیں، مانتے ہیں کہ کوئی کرپشن نہیں ہے، نہ نواز شریف نے کوئی ٹھیکہ لیا ہے، اگر نوازشریف نے کرپشن نہیں کی تو کیوں نکالا؟ اتنی بڑی نا انصافیاں کیوں ہورہی ہیں؟ کیا سرکاری خزانے میں کوئی خرد برد کی تھی؟(ن) لیگ کے قائد کا کہنا تھا کہ خود درخواست دائر کرنے والے عمران خان نے کہا کہ نوازشریف کے خلاف فیصلہ کمزور ہے، بتائیں اب اس فیصلے کی کیا حیثیت ہے، وزیراعظم ہاؤس سے نکالا، وہاں بھی نہیں رکے، اسی فیصلے کی بنا پر (ن) لیگ کی صدارت سے ہٹادیا۔میاں نوازشریف نے کہا کہ پہلے فیصلے کی وجہ سے پاکستان کے کروڑوں ووٹروں کی توہین ہوئی، ان کا ووٹ پانچ بندے پھاڑ کر پھینک دیں، کروڑوں ووٹوں کی کوئی پرواہ نہیں، پوچھتا ہوں آپ کے ووٹ کی پاکستان میں عزت ہونی چاہیے یا نہیں، ووٹ کو عزت دو، قوم نے فیصلہ کرلیا ہے جو ووٹ کو عزت نہ دے ہم اس کی عزت نہیں کریں گے۔سابق وزیراعظم کا کہنا تھا کہ میں نے قدم بڑھادیا ہے، آپ نے میرے قدم سے قدم ملا کر چلنا ہے، پاکستان مصیبتوں سے باہر نکلے گا اور خوشحالی کی ڈگر پر آئے گا، آج لوڈشیڈنگ دم توڑ رہی ہے، کہا تھا دہشت گردی ختم کریں گے اور کرکے دکھائی۔نوازشریف نے کہا آج پھر ملک میں حالات خراب کرنے اور اسے پیچھے کی طرف موڑنے کی کوشش ہورہی ہے، جو سلوک پاکستان کے ساتھ ہورہا ہے وہ بہت زیادتی ہے، شاہد خاقان عباسی کا اس میں کوئی قصور نہیں، قصور ان کا ہے جنہوں نے فیصلہ سنایا اور ملک کو انتشار کا شکار کردیا۔(ن) لیگ کے قائد نے مزید کہا کہ مجھے صدارت سے ہٹادیا، کیا آپ کو یہ فیصلہ منظور ہے؟ یہ معاملہ دھاندلی کی طرف جارہا ہے، سب سے بڑی جماعت کے ساتھ یہ سلوک ہورہا ہے، یقین ہے عوام اسے ناکام بنا دیں گے۔ان کا کہنا تھا کہ پاکستان سے محبت کرنے والا اور حق پر ڈٹنے والا انسان ہوں، پیچھے ہٹنے والا نہیں، آج پاکستان کے ساتھ جو چند لوگ سلوک کررہے ہیں وہ ہم روکیں گے اور ملک کو ڈگر پر لائیں گے۔نوازشریف نے کہا کہ اب سوچا جارہا ہے نوازشریف کو سیاست سے آؤٹ کردو، یہ آوٹ کررہے ہیں اور عوام اِن کررہے ہیں، یہ سب کچھ جو نواز شریف اور (ن) لیگ کے خلاف ہورہا ہے یہ سب آپ کو قبول ہے؟ ہم نے اس کے خلاف لڑنا ہے، ہم یہ جنگ جیتیں گے، یہ جنگ جیتنا بہت ضروری ہے، یہ ملک کی سلامتی کی جنگ ہے، آپ میرا ساتھ دیں، جیسے پہلے وعدے پورے کیے آئندہ ساتھ مل کر تمام وعدے پورے کریں گے۔سابق وزیراعظم نے کہا کہ یہ سفر تھوڑا مشکل ہے، میں بھی برداشت کررہا ہوں، عوام کو بھی میرے ساتھ تھوڑا برداشت کرنا پڑا تو کریں، ملک کو منزل تک پہنچانے کا یہی سفر ہے، اس میں ہم نے ایک دوسرے کا ساتھ دینا ہے، آج قوم تیار ہوتی نظر آرہی ہے۔

About محمد ہارون عباس قمر

محمد ہارون عباس، صحافی، براڈکاسٹراورسافٹ وئر انجینئرپاکستان کے مانچسٹر فیصل آباد میں پیدا ہوئے۔ابتدائی تعلیم فیصل آباداوربراڈکاسٹنگ کی تعلیم ہلورسم اکیڈمی ، ہالینڈسے حاصل کی۔ کمپیوٹر میں تعلیم اسلام آباد، پاکستان سے حاصل کرنے کے ساتھ ساتھ، ریڈیائی صحافت سے وابستہ رہے ہیں۔اس حوالے سے پاکستان کے مختلف ٹی وی چینلزکے ساتھ ساتھ ریڈیو ایران،ریڈیو پاکستان سے ان کی وابستگی رہی۔ تعلیم اور صحافتی سرگرمیوں کے سلسلے میں وہ پاکستان کے مختلف شہروں کے علاوہ ایران، سری لنکا، نیپال، وسطی ایشیائی ریاستوں‌کے علاوہ مشرقی یوروپ کے مختلف ممالک کا سفر کر چکے ہیں۔مختلف اخبارات میں سماجی، سیاسی اور تکنیکی امور پر ان کے مضامین شائع ہوتے رہتے ہیں۔علاوہ ازیں اردو زبان کو کمپیوٹزاڈ شکل میں ڈھالنے میں ان کا بہت بڑا کردار ہے۔ محمد ہارون عباس ممتاز این جی اوز سے وابستہ رہے ہیں۔ جن میں جنوبی ایشیائی ممالک کی تنظیم ساوتھ ایشین سنٹر اور پاکستان کی غیر سرکاری تنظیموں کے نمائندہ فورم پاکستان این جی اوز فیڈرشین شامل ہیں۔ علاوہ ازیں پاکستان مسلم لیگ کے مرکزی میڈیا ونگ اسلام آباداور پاکستان کے پارلیمنٹرینز کی تنظیم پارلیمنٹرین کمشن فار ہیومین رائٹس میں بھی تکنیکی امور کے نگران رہے ۔وہ پاکستان کے سب سے بڑے نیوز گروپ جنگ گروپ آف نیوزپیپرز، پاکستان کے اردو زبان کے فروغ کے لئے قائم کئے گئے ادارے مقتدرہ قومی زبان ، پاکستان کے سب سے بڑے صنعتی گروپ دیوان گروپ آف کمپنیز کو تکنیکی خدمات فراہم کرتے رہے ہیں۔ محمد ہارون عباس القمر آن لائن کے انتظامی اور تکنیکی امور کے نگران ہیں۔ اس کے ساتھ ساتھ انہیں انٹرنیٹ پر پاکستان کی تمام نیوز سائٹس کے پلیٹ فارم پاکستان سائبر نیوز ایسوسی ایشن کے پہلے صدر ہونے کا بھی اعزاز حاصل ہے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے