Home / اہم ترین / اولڈ سٹی ایریا ٗ تالا توڑ گروپ کے 12افغان کارندے گرفتار ٗ مال مسروقہ برآمد

اولڈ سٹی ایریا ٗ تالا توڑ گروپ کے 12افغان کارندے گرفتار ٗ مال مسروقہ برآمد

ملزمان کی تعداد 40سے زائد ٗ کچرا چننے کی آڑ میں ریکی کرنے کے بعد دکانوں کے تالے تو ڑ کر لوٹ مار کی جاتی تھی
گروہ کے کارندوں نے لی مارکیٹ ٗ گارڈن ٗ موبائل مارکیٹ ٗ سیلانی ویلفیئر کے دفتر اور دیگر جگہوں میں وارداتیں کیں ٗ ایس ایس پی سٹی
کراچی( کرائم رپورٹر) اولڈ سٹی ایریا میں نقب زنی کی درجنوں وارداتوں میں ملوث 12 ملزمان کو پولیس نے گرفتار کرلیا۔ ملزمان کا تعلق افغان گروپ سے ہے۔ گروہ میں40 کارندے شامل ہیں۔ ملزمان نے ابتدائی تفتیش میں درجنوں دکانوں کے تالے توڑ کر لوٹ مار کرنے کا اعتراف کرلیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق اولڈ سٹی ڈویژن پولیس کی جانب سے منعقد کی جانیوالی پریس کانفرنس میں ایس پی سٹی شہلا قریشی نے بتایا کہ اولڈ سٹی ایریا سمیت صدر اور دیگر علاقوں میں کئی ماہ سے جاری نقب زنی کی وارداتیں پولیس کیلئے درد سر بنی ہوئی تھیں۔ لہٰذا سٹی ڈویژ ن پولیس نے متعدد وارداتوں کے بعد ملنے والی سی سی ٹی وی فوٹیج کی مدد سے ملزمان کی شناخت حاصل کرتے ہوئے12 ملزمان بسم اللہ عرف چائنہ‘ جمعہ خان‘ نور محمد عرف نورک‘ دل محمد عرف گڈو‘ ابراہیم عرف مائل کشسپیر‘ نجیب خان عرف حاجی‘ سمندر خان عرف شاہد‘ عبدالباری عرف صدیق‘ یونس عرف گل ‘محب اللہ اور زمان کو گرفتار کرلیا ہے۔ ملزمان کا گروہ افغان باشندوں پر مشتمل ہے اور گروہ میں مجموعی طور پر40 سے زائد کارندے ہیں جو کہ پورے شہر میں صرف دکانوں کے تالے توڑنے اور کاٹنے کے بعد وارداتیں کرتے ہیں جبکہ ملزمان پہلے کچراچننے کی آڑ میں دکانوں کی ریکی کرتے ہیں اور پھر وارداتیں کی جاتی ہیں چند روز قبل انہوں نے نبی بخش میں واقع لاکھانی آٹوز میں نقب زنی کی جس میں انہوں نے گارڈ کو گولی مار کر زخمی بھی کیا تھا۔ ملزمان نے النور جیولرز ‘لی مارکیٹ ‘ گارڈن موبائل مارکیٹ‘ سیلانی ویلفیئر کے دفتر‘ شہاب الدین مارکیٹ‘ سولجر بازار‘ کلاکوٹ اور چاکیواڑہ میں درجنوں وارداتیں کیں۔ ایس پی نے مزید بتایا کہ ملزمان کے قبضے سے تالا کاٹنے اور توڑنے کے اوزار سمیت ایک پستول‘ ایک ریپیٹر اور ایک لاکھ20ہزار روپے کے ساتھ دیگر مسروقہ سامان برآمد کیا گیا ہے جبکہ8ملزمان کے خلاف تھانہ گارڈن اور4ملزمان کیخلاف تھانہ نبی بخش میں الگ الگ مقدمات درج کئے گئے ہیں۔

About محمد ہارون عباس قمر

محمد ہارون عباس، صحافی، براڈکاسٹراورسافٹ وئر انجینئرپاکستان کے مانچسٹر فیصل آباد میں پیدا ہوئے۔ابتدائی تعلیم فیصل آباداوربراڈکاسٹنگ کی تعلیم ہلورسم اکیڈمی ، ہالینڈسے حاصل کی۔ کمپیوٹر میں تعلیم اسلام آباد، پاکستان سے حاصل کرنے کے ساتھ ساتھ، ریڈیائی صحافت سے وابستہ رہے ہیں۔اس حوالے سے پاکستان کے مختلف ٹی وی چینلزکے ساتھ ساتھ ریڈیو ایران،ریڈیو پاکستان سے ان کی وابستگی رہی۔ تعلیم اور صحافتی سرگرمیوں کے سلسلے میں وہ پاکستان کے مختلف شہروں کے علاوہ ایران، سری لنکا، نیپال، وسطی ایشیائی ریاستوں‌کے علاوہ مشرقی یوروپ کے مختلف ممالک کا سفر کر چکے ہیں۔مختلف اخبارات میں سماجی، سیاسی اور تکنیکی امور پر ان کے مضامین شائع ہوتے رہتے ہیں۔علاوہ ازیں اردو زبان کو کمپیوٹزاڈ شکل میں ڈھالنے میں ان کا بہت بڑا کردار ہے۔ محمد ہارون عباس ممتاز این جی اوز سے وابستہ رہے ہیں۔ جن میں جنوبی ایشیائی ممالک کی تنظیم ساوتھ ایشین سنٹر اور پاکستان کی غیر سرکاری تنظیموں کے نمائندہ فورم پاکستان این جی اوز فیڈرشین شامل ہیں۔ علاوہ ازیں پاکستان مسلم لیگ کے مرکزی میڈیا ونگ اسلام آباداور پاکستان کے پارلیمنٹرینز کی تنظیم پارلیمنٹرین کمشن فار ہیومین رائٹس میں بھی تکنیکی امور کے نگران رہے ۔وہ پاکستان کے سب سے بڑے نیوز گروپ جنگ گروپ آف نیوزپیپرز، پاکستان کے اردو زبان کے فروغ کے لئے قائم کئے گئے ادارے مقتدرہ قومی زبان ، پاکستان کے سب سے بڑے صنعتی گروپ دیوان گروپ آف کمپنیز کو تکنیکی خدمات فراہم کرتے رہے ہیں۔ محمد ہارون عباس القمر آن لائن کے انتظامی اور تکنیکی امور کے نگران ہیں۔ اس کے ساتھ ساتھ انہیں انٹرنیٹ پر پاکستان کی تمام نیوز سائٹس کے پلیٹ فارم پاکستان سائبر نیوز ایسوسی ایشن کے پہلے صدر ہونے کا بھی اعزاز حاصل ہے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے