Home / اہم ترین / عمران خان کا کوئی چانس نہیں ہے شہباز شریف کو عوام قبول کرلے گی، پرویز مشرف

عمران خان کا کوئی چانس نہیں ہے شہباز شریف کو عوام قبول کرلے گی، پرویز مشرف

ڈان لیکس میں مریم اور پرویز رشید ملوث ہیں
ان دونوں کے خلاف تحقیقات ہونی چاہئیں
موجودہ حکمران لٹیرے ہیں جیل میں جائیں گے
میاں صاحب نے ملک کو تباہی کی طرف دھکیل دیا
کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک) سابق صدر پرویز مشرف کا کہنا ہے کہ نواز شریف کس بنیاد پر اپنا موازنہ مجھ سے اور ایوب خان سے کرتے ہیں، ہمارے ادوار میں پاکستان آسمان کو چُھو رہا تھا جبکہ میاں صاحب نے ملک کو تباہی کی طرف دھکیل دیا ہے۔ پرویز مشرف نے ان خیالات کا اظہار ٹی وی پروگرام میں دورانِ گفتگو کیا۔ انہوں نے کہاکہ ڈان لیکس کے ذریعے نواز شریف نے قومی راز فاش کیا ہے اس میں پرویز رشید اور مریم نواز بھی ملوث ہیں اس کی تحقیقات ہونی چاہیے، انہوں نے کہاکہ پاکستان ایک بڑا اور اہم ایٹمی ملک ہے اس کا وزیراعظم بچکانہ ذہنیت کا نہیں ہونا چاہیے۔ یو این او، امریکا، روس اور چین جیسے ملکوں میں جاکر مریم نواز کیا کریں گی، انہوں نے کہاکہ عمران خان کا فی الحال کوئی چانس نہیں اس کی مقبولیت میں کمی واقع ہوئی ہے، شہباز شریف کو عوام قبول کرلیں گے لیکن کیا وہ مقدمات سے بچ سکیں گے۔ انہوں نے کہاکہ موجودہ حکمران لٹیرے ہیں عدالت انہیں سزا دے گی اور یہ جیل جائیں گے۔ انہوں نے کہاکہ جب بھی کوئی نیا آرمی چیف آتا ہے تو وہ پوری دیانتداری سے وزیراعظم کے ساتھ تعاون کرتا ہے لیکن نواز شریف کے خمیر میں کوئی خامی ہے کہ وہ کچھ ہی عرصے بعد اس آرمی چیف سے محاذ آرائی کرنے لگتے ہیں، نواز شریف نے جہانگیر کرامت کو ہٹایا تھا لیکن مجھ میں ایسی بے عزتی برداشت کرنے کی صلاحیت نہیں تھی اور پھر وہ سب کچھ ہوگیا جس کا سب کو علم ہے۔ انہوں نے کہاکہ راجیو گاندھی پاکستان آیا تو ایسا لگا جیسے بے نظیر کا بھائی ان سے ملنے آگیا ہو، وہ کشمیر سے متعلق بورڈز چھپاتی پھر رہی تھیں، بے نظیر کی کرپشن کا فوج کو علم تھا انہوں نے غلط آدمی کو اپنا شوہر بنایا۔ پرویز مشرف نے کہاکہ بے نظیر کبھی بھی آرمی میں مقبول نہیں رہیں، کوئی اچھا وزیراعظم ہوتا تو وہ بھارتی پنجاب میں سکھوں کی تحریک سے فائدہ اٹھاتا، بھارت نے مشرقی پاکستان میں ایسے ہی موقع سے فائدہ اٹھایا تھا۔

About محمد ہارون عباس قمر

محمد ہارون عباس، صحافی، براڈکاسٹراورسافٹ وئر انجینئرپاکستان کے مانچسٹر فیصل آباد میں پیدا ہوئے۔ابتدائی تعلیم فیصل آباداوربراڈکاسٹنگ کی تعلیم ہلورسم اکیڈمی ، ہالینڈسے حاصل کی۔ کمپیوٹر میں تعلیم اسلام آباد، پاکستان سے حاصل کرنے کے ساتھ ساتھ، ریڈیائی صحافت سے وابستہ رہے ہیں۔اس حوالے سے پاکستان کے مختلف ٹی وی چینلزکے ساتھ ساتھ ریڈیو ایران،ریڈیو پاکستان سے ان کی وابستگی رہی۔ تعلیم اور صحافتی سرگرمیوں کے سلسلے میں وہ پاکستان کے مختلف شہروں کے علاوہ ایران، سری لنکا، نیپال، وسطی ایشیائی ریاستوں‌کے علاوہ مشرقی یوروپ کے مختلف ممالک کا سفر کر چکے ہیں۔مختلف اخبارات میں سماجی، سیاسی اور تکنیکی امور پر ان کے مضامین شائع ہوتے رہتے ہیں۔علاوہ ازیں اردو زبان کو کمپیوٹزاڈ شکل میں ڈھالنے میں ان کا بہت بڑا کردار ہے۔ محمد ہارون عباس ممتاز این جی اوز سے وابستہ رہے ہیں۔ جن میں جنوبی ایشیائی ممالک کی تنظیم ساوتھ ایشین سنٹر اور پاکستان کی غیر سرکاری تنظیموں کے نمائندہ فورم پاکستان این جی اوز فیڈرشین شامل ہیں۔ علاوہ ازیں پاکستان مسلم لیگ کے مرکزی میڈیا ونگ اسلام آباداور پاکستان کے پارلیمنٹرینز کی تنظیم پارلیمنٹرین کمشن فار ہیومین رائٹس میں بھی تکنیکی امور کے نگران رہے ۔وہ پاکستان کے سب سے بڑے نیوز گروپ جنگ گروپ آف نیوزپیپرز، پاکستان کے اردو زبان کے فروغ کے لئے قائم کئے گئے ادارے مقتدرہ قومی زبان ، پاکستان کے سب سے بڑے صنعتی گروپ دیوان گروپ آف کمپنیز کو تکنیکی خدمات فراہم کرتے رہے ہیں۔ محمد ہارون عباس القمر آن لائن کے انتظامی اور تکنیکی امور کے نگران ہیں۔ اس کے ساتھ ساتھ انہیں انٹرنیٹ پر پاکستان کی تمام نیوز سائٹس کے پلیٹ فارم پاکستان سائبر نیوز ایسوسی ایشن کے پہلے صدر ہونے کا بھی اعزاز حاصل ہے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے