مہوش حیات اور ماہرہ خان نے اپنے معاوضوں میں اضافہ کردیا

ماہرہ ایک کروڑ اور مہوش 80 لاکھ روپے مانگ رہی ہیں
فنکاروں کے بڑھتے معاوضوں سے فلم انڈسٹری کو نقصان ہونے لگا
کراچی (کلچرل رپورٹر) پاکستان کی فلم انڈسٹری کی کشتی ایک بار پھر ہچکولے کھانے لگی ہے، ایک طرف تو بھارتی فلمیں بند ہونے کے بعد شائقین نے سنیما گھروں کا رُخ کرنا کم کر دیا ہے دوسری طرف فنکاروں کے بڑھتے ہوئے معاوضے بھی فلم انڈسٹری کے لیے نقصان دہ ثابت ہو رہے ہیں۔ صف اول کی پاکستانی اداکارائوں مہوش حیات، ماہرہ خان اور مایا علی سمیت دیگر اداکارائوں نے اپنے معاوضوں میں بھی اضافہ کر دیا ہے۔ ماہرہ خان ایک کروڑ، مہوش حیات 70 سے 80 لاکھ اور مایا علی 60 سے 75 لاکھ روپے ڈیمانڈ کرنے لگ گئی ہیں۔ ایک پرائیویٹ پروڈکشن ہائوس نے 2 نئی فلموں ’’لندن نہیں جائوں گا‘‘ اور ’’لو گرو، ہو جا شروع‘‘ کے لیے مہوش حیات، ماہرہ خان اور مایا علی سے رابطے کیے ہیں، کاسٹ فائنل ہونے پر فلموں کی شوٹنگ دسمبر میں شروع ہوگی تاہم پروڈکشن ہائوسز مالکان کا کہنا ہے کہ اگر ان اداکارائوں نے اپنے معاوضے کم نہ کیے تو انہیں کاسٹ نہیں کریں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں