پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں بدھ کو بھی مندی

 کراچی: پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں بدھ کو بھی مندی چھائی رہی جس کے نتیجے میں کے ایس ای 100 انڈیکس مزید 65.20 پوائنٹس کی کمی سے 42561.27 پوائنٹس کی سطح پر آگیا۔

پاکستان اسٹاک ایکس چینج میں گزشتہ روز ٹریڈنگ کا آغاز منفی زون میں ہواجس کے باعث دوران ٹریڈنگ کے ایس ای 100 انڈیکس 42144 پوائنٹس کی نچلی سطح پرآ گیا۔

بعد ازاں سستے شیئرز کی خریداری شروع ہونے کے سبب مارکیٹ میں ریکوری آئی جس کے نتیجے میں مندی کے اثرات محدود ہوگئے لیکن مکمل طور پر زائل نہ ہوسکے اورمارکیٹ کے اختتام پر کے ایس ای 100 انڈیکس 65.20 پوائنٹس کی کمی سے 42561.27 پوائنٹس پر بند ہوا۔

اسی طرح کے ایس ای 30 انڈیکس 16.66 پوائنٹس کی کمی سے 19739.37 پوائنٹس اور کے ایس ای آل شیئرز انڈیکس 174.31 پوائنٹس کی کمی سے 29561.63 پوائنٹس پر بند ہوا۔

گزشتہ روز مجموعی طور پر 352 کمپنیوں کے حصص کا کاروبار ہوا جن میں سے 139 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں اضافہ 189 میں کمی اور 24 میں استحکام رہا۔

بیشتر کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں کمی آنے کے باعث مارکیٹ کے سرمائے میں 46 ارب 77 کروڑ 29 لاکھ روپے کی کمی ہوئی جس کے نتیجے میں مارکیٹ کا مجموعی سرمایہ گھٹ کر 79 کھرب 68 ارب 4 کروڑ 75 لاکھ روپے ہوگیا۔

بدھ کو 17 کروڑ 79 لاکھ 84 ہزار شیئرز کا کاروبار ہوا جومنگل کی نسبت 4لاکھ 17 ہزار شیئرز زائد ہے،  قیمتوں میں اتار چڑھاؤ کے لحاظ سے گیٹرن انڈسٹریز کے حصص کی قیمت 22.93 روپے کے اضافے سے بڑھ کر499 روپے اورماری پٹرولیم کے حصص 15.84 روپے کے اضافے سے 1454.50 روپے ہوگئی جب کہ پاک ٹوبیکو اورمحمود ٹیکسٹائیل کے حصص کی قیمتوں میں باالترتیب 79 روپے اور 24 روپے کی کمی ہوئی جس سے پاک ٹوبیکو کے حصص کی قیمت2150روپے اورمحمود ٹیکسٹائیل کے حصص کی قیمت 417ہزارروپے ہوگئی۔

نمایاں کاروباری سرگرمیوں کے لحاظ سے آئل اینڈ گیس ڈیولپمنٹ، میپل لیف، یونٹی فوڈزمیرٹ پیکیجنگ، ٹی آر جی پاک، پی آئی اے سی، بینک آف پنجاب، ال شہیر، اینگرو فرٹیلائز راور کے الیکٹرک کے شیئرز نمایاں رہے۔

وٹس ایپ کے ذریعے خبریں اپنے موبائل پر حاصل کرنے کے لیے کلک کریں

تمام خبریں اپنے ای میل میں حاصل کرنے کے لیے اپنا ای میل لکھیے

اپنا تبصرہ بھیجیں