ہندوستان چین کے ساتھ تنا واور ایل او سی پر اشتعال انگیزی کو سموکس سکرین کے طور پر استعمال کر رہا ہے

بھارت اپنا اصل کھیل کشمیر میں کھیل رہا ہے۔
صدر آزاد کشمیر سردار مسعود خان کا انٹرنیشنل ورچوئل کانفرنس سے خطاب
کانفرنس سے گورنر پنجاب، سینیٹر فیصل جاوید، نفیس زکریا ، برطانوی پارلیمنٹیرینز اور حریت لیڈرز کا اظہار خیال

بریڈ فورڈ(ساوتھ ایشین وائر)
مقبوضہ کشمیر میں جاری کرفیو کوتین سو دن مکمل ہو چکے ہیں۔کورونا وائرس کے ڈبل لاک ڈاون کے بعد ہندوستان نے کشمیریوں کو اپنا دشمن سمجھتے ہوئے انہیں ہندوستانی شہریوں کی طرح وبا کے ماحول میں صحت کے حوالے سے ضروری اشیا فراہم نہیں کیں۔بھارت نے کشمیر میں ہر طرح کے انسانی حقوق سلب کر رکھے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے زیر اہتمام آل پارٹیز ورچویل کشمیر ویڈیو کانفرس کے موقع پر شرکا نے کیا۔ساوتھ ایشین وائر کے مطابق کانفرنس کا انعقاد جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت کے چیئرمین راجہ نجابت حسین نے آل پارٹیز کشمیر گروپ برطانیہ کے اشتراک سے کیا تھا۔

ویڈیو لنک پر انٹر نیشنل ورچول کشمیر کانفرنس سے صدر آزاد کشمیر سردار مسعود خان، گورنر پنجاب چوہدری سرور، پاکستانی ہائی کمشنر نفیس زکریا، چیئرپرسن اے پی پی جی کشمیر گروپ ایم پی ڈیبی ابراھم کے علاوہ برطانوی پارلیمنٹ کے ممبران، شیڈو وزرا، پاکستان سے ایم این ایز، سینیٹرز کے علاوہ انسانی حقوق کے رہنماوں، یورپ، امریکہ و برطانیہ سے کشمیری رہنماں نے بھی خطاب کیا۔ انٹر نیشنل ورچول کشمیر کانفرنس کی صدارت تحریک حق خود د ارادیت کے چیئرمین و معروف کشمیری رہنما راجہ نجابت حسین نے کی۔ اس موقع پر کانفرنس سے صدر آزاد جموں وکشمیر سردار مسعود خان نے کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بھارت اس وقت انتہا پسندوں کے نرغے میں ہے، مودی سرکار آر ایس ایس اوردیگر انتہا ہندوں کے ذریعے جموں وکشمیر میں دہشت گردی کرا رہا ہے، بھارتی حکومت ہندوستان کے علاوہ کشمیر میں بھی ہندوتوا فلاسفی کو پروان چڑھا رہی ہے۔ہندوستان اس وقت چین کے ساتھ تنا واور ایل او سی پر اپنی اشتعال انگیزی کو ایک سموکس سکرین کے طور پر استعمال کر رہا ہے اور اپنا اصل کھیل کشمیر میں کھیل کروہاں آبادی کے تناسب کو تبدیل کرنے کے اپنے فاشسٹ ایجنڈے کو کشمیر میں پایہ تکمیل تک پہنچا نے کے درپے ہے۔

ساوتھ ایشین وائر کے مطابق کانفرنس سے گورنر پنجاب چوہدری محمد سرور، لندن میں پاکستانی ہائی کمشنر نفیس زکریا، لیبر پارٹی برطانیہ کی ڈپٹی لیڈر ایم پی اینجیلا رینئر،سینیٹر فیصل جاوید، ایم این اے نورین فاروق ابراھیم، برطانوی ممبران پارلیمنٹ آل پارٹیز کشمیر پارلیمنٹری گروپ کی چیئرپرسن ایم پی ڈیبی ابراھم، ڈپٹی چیئرمین ایم پی جیک بریئرٹن،شیڈو وزیر ایم پی یاسمین قریشی، چیئرمین لیبر فرینڈز آف کشمیر ایم پی اینڈریو گوون، چیئرمین کنزرویٹو فرینڈز آف کشمیر ایم پی جیمز ڈیلی، ایم پی سارہ اوون، شیڈو وزرا ایم پی ناز شاہ، ایم پی ٹریسی برابن، ایم پی محمد یاسین،ایم پی ریچل ہوپکنز،ایم پی ٹونی لائیلڈ، ایم ایل اے آزاد کشمیر سحرش قمر، سابق چیئرپرسن فرینڈز آف کشمیر یورپین پارلیمنٹ اینتھیا میکنٹائر، سابق چیئرمین فرینڈز آف کشمیر یورپین پارلیمنٹ سابق ایم ای پی رچرڈ کوربٹ، سابق کشمیری نژاد ایم ای پی شفاق محمد،سابق ایم ای پی جولی واڈ، لیبر پارٹی کی نیشنل ایگزیکٹو کمیٹی کی ممبر و تحریک حق خود ارادیت برطانیہ کی چیئرپرسن کونسلر یاسمین ڈار، حریت کانفرنس کے سینئر رہنما سید فیض نقشبندی، حریت رہنما عبد الحمید لون، مقبوضہ کشمیر سے آزادی پسند رہنما سردار نریندرا سنگھ خالصہ، حریت رہنما سید منظور احمد شاہ، کشمیر کونسل ای یو کے صدر علی رضا سید،یوتھ پارلیمنٹ کے صدر عبید الرحمن قریشی، محترمہ آسیہ حسین چیئرپرسن تحریک حق خود ارادیت مڈلینڈ، کونسلر سمیرا خورشید،عظمی رسول، ذیشان عارف چیئرمین یوتھ تحریک حق خود ارادیت، شوکت دار سینئر صحافی کے علاوہ متعد رہنماں، اہم شخصیات اور انسانی حقوق کے حوالے سے متحرک کارکنان نے بھی خطاب کیا۔
اس موقع پر گورنر پنجاب چوہدری محمد سرورنے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بھارت اپنے اندرونی حالات خراب ہونے کے باوجودکشمیر میں اپنے مذموم ایجنڈے کو تیزی کے ساتھ پروان چڑھا رہا ہے۔ پاکستان نے ہمیشہ کشمیریوں کی جدو جہد کو ہر سطح پر سپورٹ کیا اور آئندہ بھی ہر محاذ پر پاکستان کشمیریوں کے بنیادی حق خود ارادیت کے ساتھ کھڑا ہے۔
اس موقع پر کانفرنس سے دیگر مقررین نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں تعینات ہندوستانی فورسز کشمیری نوجوانوں کو ٹارگٹ کر کے قتل کرنے کے بعد ان کی لاشوں کو غائب کر رہے ہیں۔

وٹس ایپ کے ذریعے خبریں اپنے موبائل پر حاصل کرنے کے لیے کلک کریں

تمام خبریں اپنے ای میل میں حاصل کرنے کے لیے اپنا ای میل لکھیے

اپنا تبصرہ بھیجیں