شمالی عراق میں 41 دہشت گرد ہلاک کردیئے،ترکی کا دعویٰ

انقرہ (انٹرنیشنل ڈیسک) تُرک وزیر دفاع خلوصی آکار نے کہا ہے کہ شمالی عراق میں جاری فوجی آپریشن کے دوران 41 عسکریت پسندوں کو ہلاک کردیا گیا۔ خبررساں اداروں کے مطابق وزیر دفاع کی قیادت میں ہفتہ وار وڈیو کانفرنس میں فوجی کمانڈروں اور نائب وزرا نے کی شرکت کی۔ وزیر دفاع نے علاحدگی پسند تنظیم پی کے کے کے خلاف آپریشن سے متعلق تفصیلات بیان کرتے ہوئے بتایا کہ دہشت گردوں سے بڑی تعداد میں اسلحہ اور گولہ بارود قبضے میں لے لیا گیا۔ شمالی عراق میں ترک فضائیہ نے بڑی تعداد میں جنگجوؤں کے ٹھکانوں کو تباہ کیا اور 81 اہداف کو کامیابی سے نشانہ بنایا۔ واضح رہے کہ ترک فوج نے 15 جون کو شمالی عراق میں فوجی آپریشن شروع کیا تھا۔بیان میں بتایا گیا کہ فوجی کارروائی کے دوران ایک تُرک فوجی شہید ہوگیا، تاہم اس حوالے سے تفصیلات جاری نہیں کی گئیں۔ دوسری جانب عالمی میڈیا نے عراقی کردستان کے صوبے دہوک میں ترکی کی فوجی مداخلت کو انسانی بحران کے روپ میں پیش کرنا شروع کردیا ہے۔ واضح رہے کہ کُردوں کی علاحدگی پسند تنظیم پی کے کے کو انقرہ نے دہشت گرد قرار دے رکھا ہے،جب کہ امریکا بھی شام میں کردوں کے حلیف ہونے کے باوجود اسے دہشت گرد قرار دیتا ہے۔

وٹس ایپ کے ذریعے خبریں اپنے موبائل پر حاصل کرنے کے لیے کلک کریں

تمام خبریں اپنے ای میل میں حاصل کرنے کے لیے اپنا ای میل لکھیے

اپنا تبصرہ بھیجیں