ہانگ کانگ کے جمہوریت نواز میڈیا ٹائیکون کی رہائی

ہانگ کانگ (انٹرنیشنل ڈیسک) ہانگ کانگ کی حکومت نے معروف کاروباری شخصیت اور جمہوریت نواز میڈیا ٹائیکون جمی لائی کو رہا کردیا۔ پیر کے روز ان کی گرفتاری کے بعد ہانگ کانگ میں شدید احتجاج نوٹ کیا گیا تھا،جس کے بعد حکام انہیں رہا کرنے پر مجبور ہوگئے۔ ان کی رہائی کے موقع پر ان کے حامیوں نے ایپل ڈیلی کی کاپیاں ہاتھوں میں تھام رکھی تھیں۔ وہ ہانگ کانگ کی معروف میڈیا کمپنی نیکسٹ ڈیجیٹل کے مالک ہیں، جو شہر کا معروف اخبار ایپل ڈیلی بھی شائع کرتی ہے۔ اخبار ساؤتھ چائنا مارننگ پوسٹ کی رپورٹ کے مطابق 71 سالہ جمی لائی کو اپنی ضمانت کے لیے ساڑھے 37 ہزار ڈالر کی رقم مچلکے کے طور پر جمع کرانی پڑی۔ ادھر چین کی کٹھ پتلی حکومت پر تنقید کرنے والے ایپل ڈیلی نے اپنے مدیر کی گرفتاری کے باوجود آزاد صحافت کے لیے جدوجہد جاری رکھنے کا اعلان کیا ہے۔ ہانگ کانگ میں شہریوں نے اظہار یکجہتی کے لیے بڑے پیمانے پر اخبا ر کی کاپیاں خریدیں اور جمی لائی کی گرفتاری سے ان کی کمپنی کے شیئرز کی مالیت میں 300 فیصد تک اضافہ دیکھا گیا۔ واضح رہے کہ ہانگ کانگ میں نافذ متنازع قانون کے تحت جمی لائجی کے ساتھ مزید 10 افراد کو بھی گرفتار کیا گیا تھااور ان پر غیر ملکی طاقتوں کے ساتھ ملی بھگت اور جعل سازی کے الزامات عائد کیے گئے۔

وٹس ایپ کے ذریعے خبریں اپنے موبائل پر حاصل کرنے کے لیے کلک کریں

تمام خبریں اپنے ای میل میں حاصل کرنے کے لیے اپنا ای میل لکھیے

اپنا تبصرہ بھیجیں