ملک بھر کے اسکولوں میں یکساں نصاب اپریل 2021 سے نافذ ہوگا، وزیر تعلیم

اسلام آباد: وفاقی وزیر برائے تعلیم شفقت محمود نے اپریل 2021 سے ملک بھر کے اسکولوں میں یکساں نصاب نافذ کرنے کا اعلان کردیا۔ نجی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق وزیر تعلیم شفقت محمود نے اپنی وزارت کی دو سالہ کارکردگی کے حوالے سے اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے اپریل 2021 سے پہلی سے پانچویں تک ملک بھر میں یکساں نصاب لاگو کرنے کا عندیہ بھی دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر برائے تعلیم شفقت محمود نے بتایا کورونا کے باعث تعلیمی اداروں کے حوالے سے بہت سے چیلنجز کا سامنا کرنا پڑا، اگر حالات ٹھیک ہو گئے تو 15 ستمبر سے اسکول کھل جائیں گے، میٹرک اور ایف اے میں بچوں کو ایک فارمولے کے تحت پروموٹ کیا ہے، کیمبرج کے رزلٹ کے حوالے سے لوگوں کو پریشانی کا سامنا رہا جس پر کیمبرج سے بات کی جسے انہوں نے تسلیم کیا۔
شفقت محمود نے کہا کہ کورونا کے باعث 7 اپریل کو ٹیلی اسکول کا اجرا کیا، لیکن بچوں کو انٹرنیٹ کے حوالے سے مشکلات کا سامنا رہا، اب پورے ملک میں انٹرنیٹ دینے جا رہے ہیں۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ یکساں تعلیمی نصاب کا اجرا پاکستان کی 72 سالہ تاریخ میں نہیں ہو سکا تھا، اب پہلی سے پانچویں تک یکساں تعلیمی نصاب بن گیا ہے، تمام مکاتب فکر سے مشاورت کے بعد یہ نصاب بنایا گیا ہے، 2021 سے یکساں نصاب لاگو ہو گا، تمام مدارس کو بھی رجسڑڈ کیا جا رہا ہے، چھٹی سے آٹھویں تک کے نصاب پر بھی کام جاری ہے۔

شفقت محمود نے مزید کہا کہ ہنرمند پاکستان پروگرام کا آغاز بھی کر دیا گیا ہے جس کے تحت ایک لاکھ 70 ہزار بچوں کو ہنر دینے کا منصوبہ ہے، احساس پروگرام کے تحت 50 ہزار بچوں کو اسکالرشپس اورایک ہزار نرسز کو اسکالرشپس دیں گے، آرٹ اینڈ کلچر کی ایجوکیشن کے لیے ایک ہزار سے زائد اسکالرشپس دے چکے ہیں۔

وٹس ایپ کے ذریعے خبریں اپنے موبائل پر حاصل کرنے کے لیے کلک کریں

تمام خبریں اپنے ای میل میں حاصل کرنے کے لیے اپنا ای میل لکھیے

اپنا تبصرہ بھیجیں