ٹیلی گرام کے ذریعے خبریں اپنے موبائل پر حاصل کرنے کے لیے کلک کریں

القمرآن لائن کے ٹیلی گرام گروپ میں شامل ہوں اور تازہ ترین اپ ڈیٹس موبائل پر حاصل کریں

لاہور کار حادثے میں 6 افراد کی ہلاکت:  افنان کے والد کو گرفتار نہ کرنے کا حکم

 لاہور: انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت نے لاہور کے علاقے ڈیفنس میں گاڑی کی ٹکر سے 6 افراد کی مبینہ طور پر زندگی چھیننے والے ملزم افنان کے والد کو گرفتار کرنے سے روک دیا جبکہ پولیس نے ملزم کے ساتھ آگے بیٹھنے والے دوست کو حراست میں لے لیا۔

تفصیلات کے مطابق ڈرائیور ملزم افنان کے والد نے گرفتاری سے بچنے کیلیے انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت میں ضمانت کی درخواست کی جسے عدالت نے منظور کرلیا۔

عدالت نے پولیس کو ملزم افنان کے والد شفقت کو گرفتار نہ کرنے کا حکم دیتے ہوئے 27 نومبر تک عبوری ضمانت منظور کرلی۔

مزید پڑھیں: لاہور کار حادثے کے ملزم کی درخواست ضمانت واپس لینے پر خارج

قبل ازیں لاہور، ڈیفنس فیزسیون میں 6 افراد کی موت میں اہم پیش رفت اُس وقت ہوئی جب پولیس نے ڈرائیور افنان کے ساتھ فرنٹ سیٹ پر بیٹھے دوست  ابراہیم کو بھی حراست میں لیا۔

دوران تفتیش ابراہیم نے تصدیق کی کہ افنان ہی گاڑی ڈرائیو کررہا تھا جبکہ وقوعہ کے وقت گاڑی میں علی اور سعد بھی موجود تھے۔

مقدمہ کے مدعی رفاقت اور مرکزی ملزم افنان اور اسکے پکڑے گئے دوست ابراہیم سے ڈی آئی جی انویسٹی گیشن عمران کشور نے اپنے دفتر میں پوچھ گچھ کی۔

وٹس ایپ کے ذریعے خبریں اپنے موبائل پر حاصل کرنے کے لیے کلک کریں

تمام خبریں اپنے ای میل میں حاصل کرنے کے لیے اپنا ای میل لکھیے

اپنا تبصرہ بھیجیں