ٹیلی گرام کے ذریعے خبریں اپنے موبائل پر حاصل کرنے کے لیے کلک کریں

القمرآن لائن کے ٹیلی گرام گروپ میں شامل ہوں اور تازہ ترین اپ ڈیٹس موبائل پر حاصل کریں

غزہ میں اسرائیلی حملوں کی شدت، غذائی بحران سنگین

غزہ میں اسرائیلی حملوں کی شدت کے باعث غذائی بحران سنگین ہونے لگا، جبکہ امدادی سامان اور ایندھن کی غزہ تک رسائی بھی نہ ہونے کے برابر ہے۔ 

یمنی حوثیوں کا کہنا ہے کہ غزہ میں امداد نہ جانے دی تو اسرائیل جانے والے کوئی بھی جہاز ہمارا نشانہ ہو سکتا ہے۔

عالمی ادارہ خوراک نے کہا ہے کہ غزہ میں 36 فیصد گھرانے شدید بھوک کا شکار ہیں۔

یمن کے حوثی گروپ نے دھمکی دی ہے کہ اگرغزہ میں مطلوبہ امداد نہ پہنچی تو  بحیرہ احمر میں اسرائیل جانے والے تمام جہازوں کو نشانہ بنائیں گے۔

غیر ملکی خبر ایجنسی کے مطابق حوثیوں کے ترجمان نے ایک بیان میں کہا ہے کہ اگر غزہ میں انسانی بنیادوں پر امداد نہ جانے دی گئی تو وہ صیہونی ریاست کی طرف جانے والے  ہر جہاز کو روکیں گے۔ 

خیال رہے کہ حالیہ عرصے میں حوثیوں کی جانب سے بحیرہ احمر میں اسرائیلی ملکیت والے بحری جہازوں کو روکا گیا ہے تاہم نئی وارننگ میں اسرائیل جانے والے ہر جہاز کو نشانہ بنانے کی دھمکی دی گئی ہے۔ 

ترجمان کا کہنا تھا کہ یہ نہیں دیکھا جائے گا کہ جہاز کس ملک یا قوم کا ہے، اسرائیل جانے والا ہر جہاز ہمارا ہدف ہوگا۔

وٹس ایپ کے ذریعے خبریں اپنے موبائل پر حاصل کرنے کے لیے کلک کریں

تمام خبریں اپنے ای میل میں حاصل کرنے کے لیے اپنا ای میل لکھیے

اپنا تبصرہ بھیجیں